یوکے مرد ہم جنس پرست اور عورت ہم جنس پرست امیگریشن گروپ
کسیتسلیمشدہمہاجرکودیےجانےوالےتحفظکو ’پناہ‘ کہاجاتاہےاوراسکامطلبیہہےکہیوکےآپکواپنےآبائی
ملکمیںواپسنہیںبھیجےگا۔آپکووزارت داخلہیاججکومطمئن کرنےکیضرورتہوگیکہآپکواپنےآبائیملک میں نسوانی ہم جنس پرست،مردانہ ہم جنس پرست،دو جنسہ،مخنث، ہم جنس پسند یا بین صنفی (LGBTQI+) ہونے کی وجہ سے شدید نقصان کا خطرہ ہے۔

چټکۍ سره به د پنا غوښتني ادعا کوي. که څه هم، ښای دلته ډېر دالیل شتون ولري چې له مخې یې خلک ولي په چټکۍ سره د پنا غوښتني ادعا نشي ترسره کولی. که تاسو چیرته په چټکۍ سر ه ونشو کړای چې د پنا غوښتني

ادعا وکړئ نو په دې صورت کې باید وضاحت وړاندي کړئ. دا ډېره اړینه ده چې تاسو باید یو قانون پوهه ولرئ چې له تاسو سره د پناه غوښتني په جریان کې مرسته وکړي، خو په یاد ولرئ که تاسو چیرته د پناه غوښتني په ادعا کې سستي وکړه، نو ستاسو لپاره به ستونزه رامینځ ته کړي او د کورني دفتر غړي به فکر وکړي ګوندی تاسو د مهاجرت د ساتني لپاره ضرورت نه لرئ، د دې لپاره چې خپل ځان راجستر کړئ د کورني دفتر 4193 123 0300 شمیري له الري اړیکه ټینګه کړئ. دوی به له تاسو څخه ستاسو او ستاسو د کورنۍ اړوند څو ساده پوښتنې وکړي. دوی به هیڅ کله له تاسو ونه پوښتي چې ولي د پناه غوښتني ادعا کوئ. همدا راز به دوی له تاسو څخه د موقیعت غوښتنه وکړي چې په پناه غوښتني سکرینیګ یونټ، لونار کور، 40 ویلیسلی سرک، کارویډون 2BY CR9 کې درته د مرکې د نیټي لیک چیرته واستوي. که تاسو چیرته غریب ووسئ او یا د وسیدنې لپاره کور ونه لرئ کولی شئ چې مستقیم د پناه غوښتني سکرینیګ یونټ ته الړشئ. د دې لپاره اړتیا نشته چې تاسو لومړی باید د کورني یا Office Home سره اړیکه ټینګه کړئ.

 

وزارت داخلہ میں ہونے والے آپکےدوانٹرویو میں سے جوپہال انٹرویو ہوگااسکواسکریننگانٹرویوکہاجاتاہے۔ آپکےاسکریننگانٹرویومیں،وزارت داخلہ آپسےمتعلقسواالتپوچھے گیکہآپکونہیناورآپبرطانیہکیسےپہنچے۔وہآپسےپناہکےدعوےکیوجہاوروجوہات کومختصرطورپربتانےکے لیے بھیکہینگے۔ وہآپکےفنگرپرنٹساورآپکیتصویرلینگے۔اسکےبعدوہآپکوایککارڈیادوسرےکاغذاتدینگےجوآپکی ذاتیتفصیالتکیتصدیقکرتےہیناورجس کی بنیاد پرآپ نے سیاسیپناہکادعویکیاہے۔وزارت داخلہ یہ جاننے کے لیے انریکارڈونکیجانچپڑتالکرے گیکہ کیاآپپہلےبرطانیہمینرہچکےہیں،یاآپکوفنگرپرنٹکیاگیاہےیاکسیدوسرےیورپیملکمینسیاسیپناہکے لیے دعو یکیاہے۔اگرآپکےفنگرپرنٹسیورپیڈیٹابیسمینپائےجاتےہینتو،وزارت داخلہ بعدمینآپکواسملکمینواپسبھیجنےکافیصلہکرسکت یہےجہانآپنےپہلےپناہکادعویکیاتھایافنگرپرنٹکیاتھ ا۔

وزارت داخلہعامطورپرٹیلیفونپرآپکو مفت میں ترجمانفراہمکرےگا،یہضروریہےکہآپاس بات سے مطمئن ہوں کہآپاورترجمانایکدوسرےکواچھیطرحسمجھتےہیں۔ آپکئیگھنٹونتکاسکریننگیونٹمینرہسکتےہیں۔اسکےبعدوزارت داخلہفیصلہکرے گی کہآپکوحراستمینلیا جائےیاآپکےدعوےپرکارروائیکےدورانآپکورہاکیاجائے۔اسکاامکاننہینہےکہآپکواسکریننگیونٹمیں نظربندکردیاجائے۔ آپکےاسکریننگانٹرویوکےدوران،وزارت داخلہ کویہبھیپوچھناچاہیے کہکیاآپاپنیسیاسیپناہ،یا’ بنیادی ‘ انٹرویوکوکسیمردیاعورتکےذریعہکروانےکوترجیحدینگےاورآیاآپکوترجمانکیضرورتہوگی۔آپکااسائلم انٹرویودوسراانٹرویوہےجوآپکو وزارت داخلہ کو دینا ہوگاجبآپاپنی سیاسیپناہکےدعوےکےبارےمینتفصیلسےباتکرینگے ( نیچےمالحظہکریں)

سیاسی پناہ کے دعوے کے بارے میں مزید معلومات کے لیے سرکاری ویب سائٹ پر جائیں۔

 

پکے اسکریننگکےانٹرویومینیااسکےبعد،آپکوایکسوالنامہملسکتا ہے جسے آپکو مکمل کرنا ہوگا اورمقررہ

تاریخ پر وزارت داخلہ کو واپس جمع کرنا ہوگا۔ یہسوالنامہآپکےکیسکےبارےمینتفصیلیسواالتپرمشتملہے،اورآپکومکملکرنےکے لیے قانونیمشورہملناچا ہیے کیوں کہیہآپکےثبوتکاحصہہوگا۔

اگرآپسوالنامہ کوآخریتاریختکواپسنہینکرسکتےہیں،تو اس کی وجہ بتانے کے لیے آپکو آخری تاریخ میں یا اس سے پہلے وزارت داخلہ سےرابطہکرناچاہیے۔ اگرآپسوالنامہواپسنہینکرتےیاوقت پر مکمل نہ کرسکنے کی وجہ وزارت کا داخلہ کو نہیں بتاتے ہیں تو وزارت داخلہ آپکیدرخواستکوواپسلینے کےبارےمینغورکرسکتیہے ۔

اگرآپکےپاس کوئیوکیلنہینہےتو،ہمارےقانونیافسرآپکوکچھمشورہدے سکتے ہیں، جس میں مزید وقت کیسے طلب کرنا ہے ، شامل ہے ،لیکنآپکےساتھفارممکملکرنےکے اہل نہیں ہوگے۔ وزارت داخلہمینبھیجنےسےپہلے فارم کی ایک کاپی بناکر اپنے پاس رکھ لیں۔

 
2 people waving flags

آپکےاسکریننگانٹرویوکےبعد،آپکاسیاسیپناہکاانٹرویوہوگا۔اسانٹرویومینہیوزارت داخلہآپکےدعوےکیتفصیالتکےبارےمینپوچھے گی۔کچھلوگاپنیسیاسیپناہکےانٹرویوکیتاریخحاصلکرنے کےلےزیادہانتظارنہینکرتےاورکچھکئیمہینونتکانتظارکرتےہیں۔یہانٹرویوکئی گھنٹےجاریرہسکتا ہے ۔اگرآپکوترجمانکیضرورتہوتو،یہ بالیقین وزارت داخلہ کو پہلےہیبتادیں۔ وہمفتمیں ایک ترجمان کا بندوبستکرینگے۔انٹرویوکےآغازپر،وزارت داخلہپوچھے گی کہکیاآپانٹرویودینےکے لیےاچھا محسوسکر رہے ہیں ،آیاآپکوکوئیطبیضرورت تو نہین ہےاوریہ کہ آپاورترجمانایکدوسرےکوسمجھتے ہیں۔ وزارت داخلہ یہبھیپوچھے گیکہکیاآپکوئیثبوتپیشکرناچاہتےہیں۔وزارت داخلہکودینےسےپہلےآپکو دیگر زبانوں کے کسیبھیثبوتکاانگریزیمینترجمہکراناہوگا۔ وزارت داخلہ کودینےسےپہلےآپاپنےوکیلکواپنےثبوت دکھا دیں ۔آپکےوکیآلپکےانٹرویوکےفورابعدہی آپ کے ثبوت کو بھیجنےکامشورہدےسکتےہیں۔اپنےفراہمکردہہرثبوتکیکاپیرکھنا نہ بھولیں۔ وزارت داخلہ کی جانب سے انٹرویولینےواالآپکےخاندانیاورسماجیپسمنظرکےبارےمیں سوال کرے گا۔انٹرویولینےواالآپسےیہتصدیقکرنےکے لیے بھیکہےگاکہآپکادعویجنسیرجحانیاصنفیشناختپرمبنیہے۔ا نٹرویولینےوالے كو یہ پوچھنا چاہیے کہ آپ کوکسطرحمخاطبکرنا چاہیے ،مثالکےطورپرآپکونساناماستعمالکرناچاہتےہیں،اورآپاپنےجنسیرجحان،صنفیشناختیاجنسیخصو صیاتکوبیانکرنےکےلیے کونسے الفاظاستعمالکرناچاہتےہیں۔وہآپسےپوچھینگےکہآپکواپنےآبائیملکمینک سچیزکاخوفہے۔وہآپسےسواالتپوچھینگےکہآپکواپنےجنسیرجحانیاصنفیشناختکاادراککیسےہوا؟۔ اگرآپن ےاپنیجنسیخصوصیاتکیبنیادپرسیاسیپناہکادعویکیاہے،یعنیچونکہآپایکدوسرےسےالگہینتو،آپسےیہسواال تپوچھےجاسکتےہینکہآپکویہکیسےمعلومہواکہ مردوں اور عورتوں میں پائے جانے والی جسمانی خصوصیات سے آپکیجنسیخصوصیاتمختلفہیں۔یہ سواالت آپکیذاتیتاریخسے متعلق ہیں۔وہآپسےپوچھسکتےہینکہآپاپنےبارےمینکیاسوچتےہیناورکیسامحسوسکرتےہیں۔وہآپسے کسیایسیچی زکیوضاحتکرنےکوکہینگےجوآپکےآبائیملکمیں آپ کے ساتھ پیش آیا ہو یا بوقت ضرورتسابقہیاموجودہشریک حیات سے متعلق ہو۔وزارت داخلہ

کوآپسےجنسیحرکتونکیوضاحتکرنےکے لیےہرگز نہینکہ نا چاہیے۔سواالتآپکےکیسکےحاالتکےمطابقمخ تلفہونگے۔ انٹرویوکےاختتامپر،آپکواضافیمعلوماتدینےکاموقعملےگا۔آپسےیہبھیپوچھاجائےگاکہکیاآپکےپاس انٹرویومینزیربحثآنے والی وجوہات کےعالوہبرطانیہمینرہنےکیکوئیاوروجہہے۔ اگرآپکواپنےانٹرویوکےدورانوقفےکیضرورتہوتو،آپ بتا سکتےہیں۔اگرآپکوکوئیسوالسمجھ میں نہینآتا ہےتوآپکویہبتانا چاہیے ۔اگرآپکوکوئیتاریخیادیگرتفصیالتیادنہ ہونتو،اندازہلگانےکےبجائے یہ بتا دینا بہترہے تاکہایسیغلطیانکرنےکےخطرےسے بچ جائینجووزارت داخلہکویہسوچنےپرمجبورکردےکہآپسچ نہینبول رہے ہیں( جسکو' اپنیساکھکونقصانپہنچاناکہاجاتاہے '(۔ وزارت داخلہعامطورپرانٹرویوزکوریکارڈکرتیہے،لیکنآپپیشگیدرخواستدےکر اسے کرنے کویقینیبناسکتےہیں۔ انٹرویوکاتحریریریکارڈاورمیموریکارڈپرریکارڈنگعامطورپرآپکوانٹرویورومچھوڑنےسےپہلےہی دے دیجاتیہے۔ آپکےانٹرویومیں،آپسےایکایسافارممکملکرنےکے لیے کہاجاسکتاہےجسمینآپوزارت داخلہکو یہ اجازت، یا" رضامندی " دیتے ہیں کہ آپ کے ڈاکٹروں سے آپ کے میڈیکلریکارڈکیدرخواست کرسکتی ہے ۔اگرآپنہینچاہتےہینتوآپکواسکے ل یے اپنیرضامندیدینےکیضرورتنہینہے۔رضامندیسےانکارکرنےسے آپکیدرخواستکےفیصلےپراثراندازنہینہونا چاہیے ۔رضامندیکےفارمپردستخطکرنےسےپہلےاپنےوکیلس ے مشورہ کرلینا بہتر ہے ۔

ہر وہ چیز ثبوتہے جوآپوزارت داخلہ کواپنے دعو ٰی کیحمایتکے لیے پیش کرتے ہیں،بشموآلپجوکہتےہیں۔انٹرویوکےریکارڈ،بیانات،دستاویزات،خط،رپورٹیں،دوسرےگواہونکےبیانات ؛ یہ سبثبوتہیں۔ آپکوتفصیلسےبتانےکیضرورتہےکہآپکواپنے ملک میں ستائے جانے کا خوف کیوں ہے ۔وزارت داخلہ بہتسے +LGBTQI افراد کی سیاسیپناہکے دعووں کو مسترد کردیتی ہے ، کیوں کہ وہنہینمانتےکہدرخواستدہندہنسوانی ہم جنس پرست،مرد انہ ہم جنس پرست، مخنث،ہم جنس پسنداور دو جنسیہ ہے۔ لہذا اپنے جنسی رجحان، جنسی شناخت یا جنسی خصوصیات کے بارے میں باتکرنےکے لیے تیاررہناضروریہے ۔ اسکامطلبیہنہینکہجنسیتعلقاتکےبارےمینباتکریں گے ،بلکہآپایکشخصکیحیثیتسے آپ اس طرح کیسے بن گئے ، آپ ہیں کون۔ دوسری کسی بھی زبان میں لکھے ہوئے ثبوتوں کا پیشہورانہ انگریزی میں کیا ہوا ترجمہ آپ کے پاس ضرور ہونا چاہیے۔ ذیلمینثبوتکیاہمقسمینہینلیکندوسری قسمینبھیہوسکتیہیں۔ آپکےذاتیگواہکابیان آپکےبیانمیں+LGBTQIکےتجرباتکا بیان ہونا چاہیے ۔ .آپکےبیانمیں آپ پر ماضی میں ہوئے کسیبھیطرحکےظلموستمکیتفصیالتبھی ہونی چاہیے۔اسمینآپکےتعلقاتکےبارےمینتفصیالتشاملہوسکتیہیں۔اگر ضرورت ہوتو،آپکویہ وضاحت لکھنی چاہیے کہ آپنےپہلےسیاسیپناہکادعویکیوننہینکیا۔آپکویہبیانکرنےکی بھی ضرورتہےکہ آپ اپناملکواپسجانےسےکیوں ڈر رہے ہیناورآپ یہ کیوں مانتے ہیں کہ آپپرظلمکیاجائےگا۔ آپکاب یانآپکےثبوتکاایک اہمٹکڑاہے،اورآپکےوکیلکوچاہیے کہ اسکیتیاریمینآپکیمددکریں۔عامطورپر،آپ کو اپنے بیان کی شروعات اپنے خاندان،تعلیماوراپنی ک سی مالزمت سے کرنی چاہیے جو اپنے ملک یا کہیں اور آپ نے کی ہو۔ آپ کو برطانیہ کے سفر کی کچھ تفصیالت پیش کرنی چاہیے۔ اسکےبعدآپکواپنےمعاملےسےمتعلقکسیبھیتجربےیاواقعاتکیوضاحتکرنےکیضرورتہے۔ انھیں اسی ترتیب سے بیان کریں جس طرح وہ پیش آئے ہیں، اس وجہ کو بیان کرتے ہوئے اسے مکمل کریں

، جس کی وجہ سے آپ نے اپنا ملک چھوڑنے کا فیصلہ کیا ۔ اگرآپکوماضیمینستایاگیاتھا،یاظلموستمسےبچنےمینکامیابرہےہیں،توآپکواسکیوضاحتکرنےکیضرورتہ ے۔ آخرمینآپکویہبتانےکیضرورتہوگیکہآپواپسجانےسےکیونخوفزدہہیناورکونہے یا کیا چیز ہے جسسے آپڈرتےہو۔ گواہونکےبیاناتیامعاونخطوط گواہوں کےبیاناتیادوستوں،خاندان اورموجودہیاسابقہشریک حیاتکےخطوطان باتوں کیتائیدکرسکتےہیں، جو آپاپنیجنسیرجحان،صنفیشناخت،صنفیاظہاریاجنسیخصوصیات کے بارے میں کہتے ہیں اور،اگرضرورت ہو تو،آپکےساتھجوکچھہواہے ) اس کی تائید کرسکتے ہیں( ۔ہرایک شخص کے پاس ایسے بیانات نہیں ہوں گے ، یا ضرورت نہیں ہوگی۔ گواہونکےبیاناتیاخطوطپردستخطکرنےاورتاریخلکھنےکیضرورتہے۔گواہونکواپناپوراناماورپتہفراہمک رناچاہیے اورانکے شناخت نامہ کیایککاپیبھیمنسلککرنیچاہیے ۔ انھینصرفاسباتپرتبصرہکرناچاہیےجووہسبسےپہلےجانتےہیں،اوریہقیاسن ہینکرنا چاہیے کہاگرآپ کو اپناملکواپس بھیج دیا جائے، تو کیا خطرہ درپیش ہوگا۔اگرکوئیگواہبیرونملکسےخطبھیجتاہےتو،آپ اس کا لفافہ ضرور رکھیں۔ میڈیکلرپورٹس مثالکےطورپر، اگرآپپراپنےآبائیملکمینحملہہوایا طبی کیفیت کی وجہ سے آپ کو تکلیف ہورہی ہے ، تو کسیڈاکٹریااس اسپتالکی رپورٹ اہم ہوسکتی ہے جہاں آپ کا عالج ہواتھا۔ ملکسےمتعلقمعلومات ایسیمعلوماتجن سے یہ ظاہرہوتاہےکہآپکےآبائیملکمیں + LGBTQI وا لے لوگونکے لیے کیا صورتحالہے ،جیسےانسانیحقوقکیرپورٹیناورپریسآرٹیکلز، یہ بتانے میں مفید ہوسکتے ہیں کہ یہاں نقصانکاخطرہہے۔وزارت داخلہ کوچاہ یے کہ ہرملکمینکیاہورہاہےاسکےبارےمینمعلوماتتکرسائیحاصلکریناوربہتسےممالککےبارےمینکنٹریپالیسیا ورمعلوماتینوٹس موجودہیں۔ وزارت داخلہملکیمعلوماتکاتجزیہکرے گیاورفیصلہکرے گیکہ ان کی سوچ کے مطابق آپکےملککیصورت حال واقعی سنگینہونےکاخطرہہے،جسسے آپ ڈر رہے ہو۔تاہم،اگرآپاپنے اس دعوےکیتقویت کے ل یے ثبوتپیشکرتے ہینکہآپکےملکمیں + LGBTQI افرادستایاجاتے ہیں، تو یہآپکےکیسمینمددکرےگا۔

 

 
Laughing couple on a picnic mat

وزارت داخلہ آپ کے انٹرویوز اور شواہد کی بنیاد پر آپ کے دعوے پر فیصلہ کرے گی۔ اس میں کچھ دن یا مہینے لگ سکتے ہ یں۔ اگر آپ کو معقول وقت پرفیصلہ موصول نہیں ہوتا ہے تو ، آپ کا وکیلوزارت داخلہ کی تاخیر کو چیلنج کرسکتا ہے۔

چھ ممکنہ فیصلےیا ‘نتائج’ ہوسکتے ہیں۔

تیجہ 1 :5 سال تک مہاجر کی حیثیت کی منظوری

اگرآپکومہاجرکیحیثیتملجاتیہےتو،آپبرطانیہمیناسیطرحکامکرنے،پڑھنے اوردعوےکےمستحقہونگے ج س طرح برطانیہکےشہری مستحق ہیں۔

پانچسال مکمل ہونے پر،اگرآپکوابھیبھیظلموستمکاخطرہہےتوآپغیرمستقلقیام کے لیے درخواستدےسکتےہیں۔اس کے لیے پناہگزینیکیمیعادختمہونے سے پہلے آپکواپنے قیام کے لیے درخواستدینےکیضرورتہے۔

نتیجہ 2 :5 سال کے لیے انسان یت کی بنیاد پر تحفظ فراہم کرنے کی منظوری یہ مہاجر کی حیثیت کی طرح ہے۔ یہ پناہ کے دعوے کرنے والے +LGBTQIلوگوں پر شاذ و نادر ہی الگو ہوتا ہے۔

رائٹ ٹو ریمین ٹول کٹ میں مہاجرین کی حیثیت اور انسانیت کی بنیاد پر تحفظ کے مابین فرق کے بارے میں پڑھیں۔

نتیجہ 3 :پناہ کی اجازت کی دیگر صورت کی منظوری

وزارت داخلہ آپکوایکمحدودوقت( عامطورپرڈھائیسالکے لیے )برطانیہمینرہنےیا " قواعدسے ہٹ کر " پناہ کی اجازت کے لیے ‘‘صوابدیدی’’ اجازت دے سکتی ہے۔ ایسا بہتکم ہی ہوتا ہےلیکنمناسبہوسکتاہے،مثالکےطورپر،اگرآپبرطانویشہری کے ریلیشن شپ مینہیناورایسے غیرمعمولیحاالتہینکہ جس کی وجہ سے آپاپنےساتھیکے پاس جانے کے لیے ویزاکے لیے درخواستدینےکے لیے اپنےآبائیوطنواپسنہینجاسکتےہیں۔دوسریوجوہاتکی بنا پر بھی آپکوصوابدیدی اجازت دی جاسکتی ہے۔

نتیجہ 4 :نامنظور کردیا گیا - برطا نیہ میں اپیل کے حق کے ساتھ

اگروزارت داخلہ آپکیدرخواستمسترد کردیتی ہے تو،عامطورپرآپکواپیلکاحقحاصلہوگا۔مزیدمعلوماتکے لئے ‘ اپیلیں ’دیکھیں۔

نتیجہ 5 :نامنظور کردیا گیا - برطانیہسےملک بدر کرنے کے بعد اپیلکاحقنہیں

وزارت داخلہ بعضاوقاتپناہکےدعوونکو' صریحا .بےبنیاد 'قراردیتیہے۔اسکامطلب یہ ہے کہ وہ یہ مانتے ہیں کہ سیاسیپناہکادعویکامیابنہینہوگا،اوربرطانیہکےاندرسےبھیاپیلکاحقنہینہوگا۔ایساتبہوسکتاہےجبوزارت داخلہکو یہ یقینہوکہآپکااصلملک آپ کے لیے پر امن ہے۔بہت ہی شاذمعامالتمیں،وزارت داخلہ کسیدعوےکیتصدیقکرے گیاگروہیہسمجھتےہینکہیہانتہائیناقابلیقینہےکہوہشخص + LGBTQI ہے۔آپکسیوکیلکیمددسےعدالتیجائزےکے لیےدرخواستدےسکتےہیں۔

نتیجہ 6 :نامنظور کردیا گیا - اپیل کا حق نہ یں

وزارت داخلہ کچھ معامالت مین پناہ کی درخواست کے خالف اپیل کے تمام حق کو مسترد کردیتی ہے ،کیوں کہ پناہ کے دعوے کی وضاحت کرنے کے لیے پچھلی اپ یلیا موقع موجود تھا۔ آپ کسیوکیل کی مدد سے عدالتی جائزے کے لیے درخواست دے سکتے ہیں۔

رائٹ ٹو ریمین ٹول کٹ میں عدالتی جائزوں کے بارے میں مزید پڑھیں

 

اگر وزارت داخلہ آپ کی درخواست مسترد کردیتی ہے تو ، عام طور پر آپ کو اپیل کا حق حاصل ہوگا۔ آپ کو الزمی طور پر اپنے اپ یل فارم کو آپ کو بھیجے گئے نامنظوری کے لیٹر کی تاریخ سے 14 دن کے اندر اندر فرسٹ ٹائرٹریبونل )ابتدائی درجہ کی خصوصی عدالت( )امیگریشن اینڈ ا سائلم چ یمبر( کو بھیجنا چاہ یے۔ آپ کی اپیل کا فیصلہ فرسٹ ٹائر ٹریبونل کے جج کے ذریعہ کیا جائے گا ، جوقانونی عدالت ہے۔ جج وزارت داخلہ سے اوپرہے۔ آپ کو ان وجوہات کا جواب دیتے ہوئے اپنے کیس کی تیاری کرنی چاہ یے جن کی وجہ سے وزارت داخلہ نے آپ کے دعوے کو مسترد کردیا تھا ۔ آپ سے یہی توقع ہے کہ آپ عدالت میں حاضر ہوں گے اوروزارت داخلہ کے نمائندے اور جج کواپنے کیس سے متعلق سواالت کے جوابات دے کر ’ثبوت’ پیش کریں گے ۔ آپ کے پاس موجود گواہوں کو بھی اس میں شریک ہونا چاہیے ۔ آپ ‘ مدعی’ ہوں گے اور وزارت داخلہ ’مدعا علیہ ہوگی۔

رائٹ ٹو ریمین ٹول کٹ میں فرسٹ ٹائرٹریبونل اور اپر ٹریبونل میں اپیل کرنے کے بارے میں مزید پڑھیں یا اس ویڈیو کو دیکھیں۔ آپ اپیلوں سے متعلق معلومات سرکاری ویب سائٹ سے بھی حاصل کرسکتے ہیں۔

اپیلونمینرازداری

برطانیہ میں ٹریبونلزیا دیگر عدالتوں میں اپیلیں عوامی ہوتی ہیں اور کوئی بھی عام آدمی شریک ہوسکتا ہے ۔ آپ کی اپیل کی سماعت ایک جج کے ذریعہ ہو گ یجو اسی دن د یگر اپیلوں کی سماعت کریں گے اور دوسرے لوگ بھی آپ کے کیس کو سن سکتے ہیں۔

کسی بھی اپ یل کا فیصلہ )تحریری فیصلہمیں تفصیلی وجوہات ہوتی ہیں( ایک عوامی دستاویز ہے اور اس میں مدعی اور مندرج گواہوں کے نام ہوں گے ۔فرسٹ ٹائر ٹریبونل کے فیصلے شاید ہی عام ہوتے ہیں۔ البتہ اپر ٹریبونل کے فیصلے عام طور پر شائع ہوتے ہیں۔

اگر آپ نہیں چاہتے کہ آپ کا نام عام ک یا جائے تو آپ کو ٹریبونل کو ضرور بتانا چاہیے۔جب آپ ٹریبونل کو اپیل فارم بھیجتے ہو تو آپ کو اس کے بارے میں معلوم کرنا چاہیے۔

ایسی دو چ یزیں ہین جنھیں آپ ٹربیونل کو کرنے کے لیے کہہ سکتے ہیں:

1 .اپیل میں اپنے نام کی جگہ نام کا پہال حرف استعمال کرے ، یا اگر مضبوط وجہ ہو تو فیصلہ سے تمام ناموں حذف کردے ۔ آپ کو اور وزارت داخلہ کو بھیجی گئی کاپیوں میں نام باقی رہیں گے، البتہ عوامی ریکارڈ کی کاپی ، یا عدالت کے سماعتی کمرے کے باہر دیوار پر مقدمات کی فہرست میں نام نہیں ہوں گے۔

2 .اگر کوئی بہت ہی مضبوط وجہ ہے تو ،پرائیویٹ طور پر ایسے کمرے میں سماعت کرے ، جہاں کسی کو آنے کی اجازت نہ ہو۔

ٹرییونلسماعت سے پہلے آپ کو تحریری طور پر بتائے گا کہ وہ آپ کی درخواستوں سے اتفاق کرتے ہیں۔ سماعت کے دن ، سماعت شروع ہونے سے پہلے ، ٹریبونل کے عملے کو ضرورمعلوم ہو کہ نجی سماعت یابے نامی سماعت کا حکم دیا گیا ہے۔

 

 
Hands with painted finger nails on a face

رسٹ ٹائرٹریبونل کے دو ممکنہ نتائج ہوسکتے ہیں۔

نتیجہ 1 :اپیل کی اجازت

اسکامطلبہےکہآپجیتگئےہیں۔اگرآپ

برطانیہمیناپنینجیاورخاندانیزندگیجیسے مختلفبنیادونپراپنیاپیلجیتجاتےہیں، تووزارت داخلہ کوآپکومہاجرکادرجہیاانسانیتحفظ ، یااجازت کی کوئی دوسری شکل فراہم کرنی چاہیے۔

تاہم ، وزارت داخلہ کے پاس فرسٹ ٹائرٹریبونل کے فیصلے کے خالف اپیل کی اجازت کی درخواست دینے کے لیے 14دن کا وقت ہے اگر وہ سمجھتے ہیں کہ جج نے قانون کی غلطی کی ہے۔ اگر وزارت داخلہ کو اپ یل کرنے کی اجازت مل جاتی ہے تو ، آپ کا کیس اپر ٹریبونل کو بھیجا جائے گا۔

نتیجہ 2 :اپیل خارج کردی جائے

اس کا مطلب ہے کہ آپ ہار گئے ہیں۔

اپر ٹریبونل میں اپ یل کی اجازت کے لیے درخواست دینا

آپ فرسٹ ٹائر ٹریبونل کے فیصلے کے خالف اپر ٹریبونل میں اپ یل کی اجازت کی درخواست دے سکتے ہیں اگر آپ کو یقین ہے کہ جج نے قانون کی غلطی کی ہے۔ ’قانون کی غلطی‘ کا مطلب یہ ہے کہ جج نے جس طرح سے قانون کا اطالق ک یایا ثبوت پر غور کیا اس میں غلطی ہوئی ہے اور اگر وہ غلطی نہیں کرتے تو ، وہ آپ کی اپ یل کی اجازت دے سکتے تھے۔

آپ کو فیصلہ بھ یجے جانے کے 14 دن کےاندر آپ کو تحریری طور پر درخواست بھیجنی ہوگی۔ آپ کا وکیل آپ کو مشورہ دے گا کہ آیا اپ یل کی اجازت کے لیے درخواست کامیاب ہوسکتی ہے۔ آپ کو فرسٹ ٹائرٹریبونل میں اپیل کرنے کی اجازت کے لیے اپنی درخواست بھیجنی چاہیے ۔

اگر فرسٹ ٹائر ٹریبونل اپ یل کرنے کی اجازت کو مسترد کردے تو ، آپ براہ راست اپر ٹریبونل میں درخواست دے سکتے ہ یں۔ اگر اپر ٹریبونل بھی اجازت دینے سے انکار کردے تو ، آپ کسی وکیل کی مدد سے عدالتی جائزے کے لیے درخواست دے سکتے ہیں۔

اپر ٹریبونل سماعت

اگر فرسٹ ٹائریا اپر ٹریبونل آپ کو اپیل کرنے کی اجازت دیتا ہے تو ، اپر ٹریبونل میں سماعت ہوگی۔

سماعت کے موقع پر ، اپر ٹریبونل پہلے یہ طے کرے گا کہ فرسٹ ٹائر ٹریبونل نے قانون کی غلطی تو نہیں کی ہے۔ اگر اپر ٹریبونل کو معلوم ہوتا ہے کہ قانون میں غلطی ہوئی ہے تو ، وہ دو میں سے ایک کام کریں گے:

1 .وہ اس معاملے کو فرسٹ ٹائر ٹریبونل کو بھ یج دیں گے ، جس پر دوسرے جج کے ذریعہ دوبارہ سماعت ہوگی ۔ یا

2 .وہ خود دوبارہ ف یصلہکریں گے۔ اگر اپر ٹریبونل نے دوبارہ فیصلہ کیا تو ، یہ عام طور پر کسیدوسری سماعت کے بعد کیا جائے گا۔ اگر اپر ٹریبونل دوبارہ فیصلہ کرتا ہے تو وہ آپ کو اپیل کی اجازت بھی دے سکتا ہے یا خارج بھی کرسکتا ہے ۔

متبادل کے طور پر ، اپر ٹریبونالس نتیجے پر پہنچ سکتا ہے کہ فرسٹ ٹائرٹریبونل کے فیصلے میں قانون کی کوئی غلطی نہیں ہوئی تھی اور آپ کی اپیل خارج کردی جائے گی ۔

اپر ٹریبونل کے فیصلوں پر اپیل کورٹ میں اپیل کی جاسکتی ہے ، لیکنیہ پیچیدہ ہے اور آپ کی مدد کے لیے آپ کو کس ی وکیل کی ضرورت ہوگی۔

اگر آپ کی اپ یل خارج کردی جاتی ہے اور آپ مزید اپ یل نہیں کرسکتے ہ یں تو ، ممکن ہے کہ وہ پناہ حاصل کرنے کے لیے ‘نیا دعو ٰی’ کریں لیکنیہ ا یک پیچیدہ عمل ہے۔

اگر آپ نئے شواہد حاصل کرسکتے ہینیا اگر آپ کے آبائی ملک م یں +LGBTQIلوگوں کی صورتحال میں کوئی تبدیلیآئی ہے تو آپ ایک نیا دعو ٰی کر سکتے ہیں۔ اپنے نئے شواہد پیش کرنے کے لیے آپ کو لیورپول کے فردر سب میشن یونٹ میں شرکت کے لیےاپوائنٹمنٹ لینی ہوگی ۔ کچھ حاالت میں ، آپ سے لیورپول جانے کی توقع نہیں کی جائے گی ، جیسے کہ۔ آپ حراست میں ہ ینیا طبی پریشانی کی وجہ سے سفر نہ یں کرسکتے ہ یں۔

آپ سرکاری ویب سائٹ پر نیا دعو ٰی پیش کرنے کے عمل کے بارے میں پڑھ سکتے ہیں۔

 
A smiling couple

وکیل ڈھونڈنے کے لیے ، آپ Rainbow Migration's ک ی ویب سائٹ پر درج افراد سے رابطہ کرسکتے ہیں ، جس کے پاس ایسے وکیل ہیں جس کی فیس آپ کو ادا کرنی ہوگی اور کچھ ایسے وکیل ہیں جن کی فیس کی ادائیگی قانونی امداد کے ذریعہ ہوتی ہے ۔

اگر آپ کے پاس وکیلکی فیس دینے کے لیے اتن ی رقم نہیں ہے تو ، آپ قانونی امداد کے مستحق ہوسکتے ہ یں۔ قانونی امداد کے وکیل بہت اچھے ہوسکتے ہیں کیوں کہ ان کے پاس کافی تجربہ ہوتا ہے۔

قانونی امداد ادا کرے گی:

• آپ کی پناہ کے دعوے کو تیار کرنے کے ل یے آپ کے وکیل کی فیس

• آپ کے وکیل کے ساتھ اپوائنٹمینٹ میں شرکت کے لیے ایک پ یشہ ور ترجمان کی فیس

• ثبوت کے ترجمہ کی فیس

• اگر ضرورت ہو تو میڈیکلیا ملک کے ماہرین کی رپورٹس

• آپ کی اپیل تیار کرنے والے آپ کے وکیل کی فیس

• ٹریبونل کی سماعت میں آپ کی نمائندگی کرنے کے لیے آپ کے وکیل یا بیرسٹر کی فیس

جب تک آپ حرات میں ہیں، تب تک قانونی امداد عام طور پر آپ کے ذریعہ پناہ کے دعوے کے اندراج کے لیے وزارت داخلہ کو فون کرنے ،یا اپنے ساتھ اپنے یسیاسی پناہ کے انٹرویو میں شرکت کے لیے کسی وکیل کی ادائیگی نہیں کرتی ۔ یہ سیاسی پناہ ک یان اپ یلوں پر کام کیادائیگی نہ یں کرسکتی جن کے کامیاب ہونے کا امکان نہیں ہے۔

قانونی امداد کسی نئے قانون ی امدادی وکیلسے تبادلہ کی اجازت تبھی دے گی جب کہ کوئی مضبوط وجہ ہو۔

اگر آپ وزارت داخلہ کے ذریعہ نظربند کیے گئے ہیں اور آپ کو قانونی امداد کے وکیل کی ضرورت ہے تو ، ویلفیئر آفس سے کہیں کہ قانون یکارروائی کے لیے آپ کا اندراج کرے۔

س بات کو یقینی بنائیں کہ آپ اپنے کیس کی ت یاری کے لیے اپنے وکیل کے ساتھ سخت محنت کریں گے ۔ اگر آپ کو لگتا ہے کہ کچھ اور کرنا چاہیے تو سواالت پوچھیں۔ اگر آپ اپنے کیسے پر کیے گئے کام سے مطمئن نہیں ہ یں تو ، ہم مدد کرسکتے ہیں۔ برائے کرم ہم سے رابطہ کریں۔

ہر شخص کے ل یے قانونی امداد کے کئی وکیل دستیاب نہیں ہیں ج سے ا یک کی ضرورت ہے۔ یوکے ایل جی آئی جی بعض اوقات ان لوگوں کی مدد کرسکتا ہے جو خود وکیل تالش نہیں کرسکتے ہ یں۔

چیک کریں کہ ک یا آپ قانونی امداد حاصل کرسکتے ہیں اور قانونی امداد ایجنسی کی ویب سائٹ پر مزیدقانونی امدادی وکال کے بارے میں دیکھ سکتے ہیں

 
2 people waving flags